ڈونلڈ ٹرمپ کی انتخابی مہم مذاق بن کر رہ گئی-

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی انتخابی مہم مذاق بن کر رہ گئی ہے ٹویٹر پر جہاں ڈونلڈ ٹرمپ ایک ملین لوگوں کی  شرکت کے متمنی نظر آئے وہیں بمشکل دس ہزار لوگ ہی اکٹھے ہو پائے ہیں-

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنی انتخابی مہم کا آغاز امریکی ریاست اوکلاہوما کے علاقے تلسا سے کیا ہے اس سلسلے میں 19,000 تماشائیوں کی گنجائش رکھنے والے ارینا کی بکنگ کی گئی تھی-

جبکہ دوسری طرف ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹویٹ کیا تھا کہ انکی ریلی میں ایک ملین افراد شرکت کریں گے لیکن ریلی کے انعقاد کے جگہ پر بمشکل دس ہزار لوگ ہی جمع ہوئے-

انتخابی مہم کی انتظامیہ کی جانب سے بہت بڑی کمپین چلائی گئی تھی اور اس سلسلے میں خاص طور پر سوشل میڈیا کو صفحہ اول پر رکھا گیا تھا اور مشہور زمانہ شارٹ ویڈیو اپلیکیشن ٹک ٹاک پر بھی بکنگ کے لیے لنک شئیر کیے گئے تھے-

لیکن اس سب کے باوجود لوگوں نے کسی بھی قسم کی دلچسپی نہیں دکھائی- تاہم ٹرمپ کی انتخابی مہم کے میڈیا انچارج نے بتایا کہ بڑی تعداد میں فیک نمبر سے بکنگ کی گئی تھی لیکن ہماری طرف سے انہیں کینسل کیا گیا تھا- 

ڈونلڈ ٹرمپ کا ٹوئٹر پر یہ دعویٰ خام خیالی ہی ثابت ہوا ہے –

اپنا تبصرہ بھیجیں