فواد چوہدری جہانگیر ترین کے خلاف پھٹ پڑے

وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ پاک فوج اور وزیراعظم عمران خان ایک پیج پر ہیں اور دونوں کو ایک دوسرے کی مکمل حمایت حاصل ہے ملک کو داخلی و خارجی محاذوں پر مشکلات کا سامنا   ہے حکومت اور فوج کا ساتھ اس وقت ملک کے لئے بہت ضروری ہے-

غیر ملکی میڈیا سے بات کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی میں اختلافات سے پارٹی کمزور ہوئی ہے جہانگیر ترین اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے درمیان کشمکش سے حکومت کو بھی شدید نقصان ہوا ہے- جس کے باعث زیادہ تر عہدے بیوروکریٹس کے پاس جا چکے ہیں –

اندرونی اختلافات کسی بھی پارٹی کو کمزور کرتے ہیں اور حکومت کی گڈ گورننس کو بھی پسِ پشت ڈال دیتے ہیں – انہوں نے مزید بتایا کے جہانگیر ترین نے اسد عمر کو وزارت سے ہٹوایا جب اسد عمر واپس آئے تو انہوں نے جہانگیر ترین کا پتہ صاف کرادیا-

شاہ محمود قریشی اور جہانگیر ترین میں ملاقاتیں ہوئیں لیکن صلح نہ ہو سکی۔ ہر پارٹی میں دھڑے بنتے ہیں لیکن جس شاخ پر بیٹھتے ہیں اسے کاٹا نہیں جاتا ایسا کرنے والا خود اپنا ہی کام تمام کرواتا ہے۔ وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان نے صوبائی حکومتوں کی لیڈر شپ کمزور لوگوں کو دی جو ہر بات پر ڈکٹیشن لیتی ہے۔ ڈکٹیشن کے بغیر یہ حکومتیں صفر ہیں اور وزیر اعظم کو خود سب اجلاسوں کی سربراہی اور احکامات کرنے پڑتے ہیں-

اپنا تبصرہ بھیجیں