پاکستان میں پٹرول 25 فیصد مہنگا

حکومت پاکستان نے پٹرولیم مصنوعات کے نرخ بڑھانےے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ وزیراعظم عمران خان نے پٹرولیم مصنوعات کی نرخ بڑھانے کے لیے وزارت پٹرولیم کی تجویز کردہ سمری کو منظور کر لیا ہے- جس کے بعد نرخ میں اضافے کا اعلان کردیا گیا ہے۔ حالیہ اقدام کے بعد قیمتوں میں حیرت انگیز اضافہ سامنے آیا ہے-

تفصیلات کے مطابق غیر معمولی بات ریکارڈ کی گئی ہے کہ یہ اقدام روایتی طور پر ہر مہینے کے اختتام پر آخری دن کیا جاتا ہے- لیکن اس دفعہ پٹرول کے نرخ بڑھانے کے فیصلے پر ماہ ختم ہونے سے 4 دن پہلے ہی آج 26 جون ہی سے عملدرآمد ہونے کا امکان ہے۔ جسے ایک غیر معمولی قدم کے طور پر دیکھا جا رہا ہے-

سمری کے مطابق آج رات 12 بجے سے ایک لیٹر پٹرول کی قیمت 25 روپے 58 پیسے، ایک لیٹر ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 21 روپے 31 پیسے، مٹی کے تیل کی قیمت 23 روپے 50 پیسے اور ایک لیٹر لائٹ ڈیزل کی قیمت 17 روپے 84 پیسے بڑھ گئی ہے۔

حالیہ اضافے کے بعد ایک لیٹر پٹرول کی نئی قیمت 100 روپے 10 پیسے، اسی طرح ڈیزل فی لیٹر کی نئی قیمت 101 روپے 46 پیسے، جبکہ مٹی کا تیل 59 روپے فی لیٹر اور لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 55 روپے 98 پیسے فی لیٹر ہوگئی ہے-

ذرائع کے مطابق اس غیر متوقع اور بڑے اضافے کے بعد مہنگائی کی نئی لہر آنے کا خدشہ ہے-

اپنا تبصرہ بھیجیں