امارات نے پاکستان سے آنے والی تمام فلائٹس معطل کردیں

یو اے ای کے شعبہ شہری ایویشن اتھارٹی (جی سی سی اے) نے بروز سوموار 29 جون سے کورونا کے تشخیصی ٹیسٹ کے لیے خصوصی لیبارٹری کے قیام اور فعالیت تک پاکستان سے پروازیں عارضی طور پر ملتوی کرنے کا اعلان کیا ہے اور تمام ائیر لائنز کو اس سلسلے میں مطلع کردیا گیا پے۔
متحدہ عرب امارات کی سرکاری خبر رساں ایجنسی (وام) کے بیان کے مطابق کہا گیا ہے کہ یہ حفاظتی اقدام پاکستان سے آنے والے پیسنجرز کی صحت اور سلامتی کو یقینی بنانے کے لیے ہے۔ اور مسافروں کے وسیع تر طبی فائدہ کیلیے اٹھایا گیا ہے-

امارات کی جنرل سول ایوی ایشن اتھارٹی نے مزید کہا کہ کورونا کے تشخیصی ٹیسٹ کے لیے خصوصی لیبارٹری کے قیام تک یو اے ای کے ائیر پورٹس پرتمام مسافروں بشمول ٹرانزٹ سمیت کسی کو بھی داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی- نیز یہ فیصلہ ان پیسنجرز پر بھی لاگو ہوگا جو کہ براسطہ یو اے ای کسی اور ملک کے لیے سفر کرہے تھے-

ادارے کے مطابق اس فیصلے سے متاثر ہونے والے افراد سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ پروازوں کی ری شیڈولنگ اور نئی بکنگ کے لیے ایئر لائن کمپنیوں سے رابطہ کریں اور اپنے سفری شیڈول پر نظر ثانی کریں۔

واضح رہے کہ اس سے پہلے پاکستان میں کورونا کے بڑھتے ہوئے متاثرین کی وجہ سے امارات ایئر لائنز نے پاکستان سے فلائٹ آپریشن عارضی طور پر ملتوی کر دیا تھا- ائیرلائین حکام کا کہنا تھا کہ یہ فیصلہ کیبن کریو اور مسافروں کی صحت وسلامتی کیلیے ناگزیر تھا-

اپنا تبصرہ بھیجیں