سوشل میڈیا پر اساتذہ مخالف پوسٹ لگانے پر طلباء کو سزائیں

صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں نجی یونیورسٹی نے سوشل میڈیا پر اساتذہ کا مذاق اڑانے اور تضحیک کرنے پر طلباء  کو مختلف سزائیں سنائی ہیں- اور ان تمام طلباء کو وارننگ بھی دی گئی ہے-

ذرائع کے مطابق لاہور میں واقع نجی یونیورسٹی کی مینجمنٹ نے 34 طالب علموں کو مختلف سزائیں دیں ہیں جبکہ 13 طالب علموں کو تنبیہ جاری کی گئی ہے اور اس کے ساتھ ساتھ معافی نامہ سوشل میڈیا پر اپنے اکاؤنٹ پر لگانے کا حکم دیا گیا ہے۔ سزاؤں پر عملدرآمد نہ کرنے پر مزید کاروائی کا عندیہ بھی دیا گیا ہے-

جامعہ کی جانب سے 10 طلباء کے مارکس کم کر کے انہیں روزانہ یونیورسٹی گراؤنڈ سے کچرا اکٹھا کرنے کی سزا دی گئی ہے- جبکہ 12 گریجویٹ سٹوڈنٹس کو مزید معافی نامہ پوسٹ فیس بک پرچسپاں کرنے کی ہدایت جاری کی گئی ہے- جامعہ نے اپنے اعلامیے میں کہا ہے کہ آرڈرز پر عمل نہ ہونے کی صورت میں ڈگری منسوخ کی جا سکتی ہے۔ اس سلسلے میں یونیورسٹی کا فیصلہ حتمی مانا جائے گا-

اپنا تبصرہ بھیجیں