امریکہ، آن لائن تعلیم لینے والے طلباء کو ملک چھوڑنے کا حکم

ریاست ہائے متحدہ امریکہ میں کرونا وائرس کے عروج پر امریکی حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ جن کالجز یا یونیورسٹیوں میں آن لائن کلاسز ہورہی ہیں ان کے غیر ملکی طلباء کو ان کے ممالک روانہ کر دیا جائے-

 تفصیلات کے مطابق فیصلے میں کہا گیا ہے کہ ایسے کالجز اور یونیورسٹیاں جو باقاعدہ کلاسز منعقد نہیں کر رہے ان کے طلباء کو امریکہ میں رہنے کی ضرورت نہیں ہے اور وہ اپنے ممالک میں بھی آن لائن تعلیم حاصل کر سکتے ہیں-

 امریکی حکام کے اس اقدام کے بعد طلبہ میں بے چینی دوڑ گئی ہے- طلباء نے تشویش ظاہر کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے کچھ دنوں میں امتحانات ہونے والے تھے جو کہ فی الوقت ملتوی کردیے گئے ہیں، انہیں یہ سال کھٹائی میں پڑتا نظر آرہا ہے اور محکمہ تعلیم کی پالیسی اس سلسلے میں بالکل بے سمت رہی ہے- 

خبر رساں ادارے کے مطابق ایسے طلباء جو رضاکارانہ طور پر امریکہ سے روانہ نہیں ہوں گے انہیں ملک بدر بھی کیا جا سکتا ہے-

واضح رہے کہ اب تک امریکہ میں کرونا وائرس کے 2,888,635 مریض رپورٹ ہو چکے ہیں اور129,947 اموات بھی ہوچکی ہیں- 

اپنا تبصرہ بھیجیں